Home / مضمون / کالام سڑک امیر مقام ہی کیوں‌ بنائیں؟………………… تحریر: عالم کالامی

کالام سڑک امیر مقام ہی کیوں‌ بنائیں؟………………… تحریر: عالم کالامی

تو پھر امیر مقام ہی سڑک کیوں بنائیں؟ نہ تو وہ ہمارے ایم پی اے ہیں‌ نہ ایم این اے، بلکہ کونسلر تک نہیں. جناب اگر دماغ کے گھوڑے ذرا دوڑا ئیں‌ تو کیا سلیم رحمان کو اہلیان سوات کوہستان نے سانپ کے پاؤں بنا یا ہے یا کہ ایم این اے جو الیکشن کے بعد کسی کو نظر ہیں‌ نہیں‌ آتے. امیر مقام کالام سڑک تعمیر کروانے والے سیاسی بے شرم ہوسکتے ہیں یا پھر عقل کے پیدل.
لیکن یہ تو ان کی زرہ نوازی ہے کہ کالام سڑک کے لئے کئی سالوں‌ سے در در کی خاک چھان رہے ہیں. مگر ان لوگوں‌ کی سیاسی شعور پر ماتم ہونا چاہئے جو اس سڑک کی عدم تعمیر پر ان کو مورد الزام ٹہراتے ہیں.
ویسے عمران خان صاحب کا عین مقصد تو صرف دھرنوں اورجلسوں کو کامیاب بنانا ہے، میرے ناقص خیال کے مطابق ان کو بورڈ ممبرز بنانا چاہے کہ فلاح شہر میں اتنے لوگوں کی تعداد تهی فلاح میں اتنے وغیرہ وغیرہ.
.یار کیا ہوتا اگر ایک جلسے کے جمع پونجی کالام سڑک پر خرچتے ایک جلسہ ناکام ہوجائیں اور سوات کوہستان کی قسمت جاگ جائیں. ڈھیر ساری دعاؤں سے بھی نوازے جاتے.
اپنے ووٹ بینک رکھنے والے شہروں میں‌ پانچ سو کلومیٹر سڑکیں اکھاڑ کر نئے سرے سے بناسکے ہیں. موٹرویز بناسکتے ہیں‌ لیکن 30 کلومیٹر وفاق کے فنڈ کے بغیر بنایا نہیں جاتا سکتا؟
نکلے ہیں “نیا پاکستان” بانے. مگر جس صوبے میں‌ ان کی پارٹی برسر اقتدار ہے. مگر سوات کوہستان میں‌ ان کے ایم پی اے چوتھی پوزیشن پر رہیں تو اس کا مطلب یہ نہیں‌ لینا چاہئے کہ سوات کوہستان خیبر پختونخوا سے الگ تسلیم کیا جائے؟ یا تو پھر اگر آپ کے پاس کوئی فارمولا ہے تو ایم این اے سلیم الرحمن کو برخاست کرکے کسی اورکو اسمبلی میں‌ بٹھادیں یا ببانگ دھل بتادو کہ اہلیان سوات کوہستان کے مسائل ہم سے حل نہیں‌ ہونے والے. بندہ ناچیز بھی ایک فارمولا تجویز کرنے کی جسارت کرتا ہے
اگر ریاضی کا کلیہ لگائیں‌ تو کالام سڑک اس طرح بھی بن سکتا ہے 000000000×111111=???

کمنٹس

آپ کی رائے

Check Also

شیداٞل اتروڑ، چُنڑیل: سلیم خانے اتروڑ

اُچات اُچات کھٞن، پالے پالے زنگٞل، نیل نیل ڈینڑ تے اسوں میٞہ لُکوٹ شانہ اٞ …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *